شاعری

pictureمجھے اذنِ جنوں دے دو

شاعرہ: شازیہ اکبر
موسمِ اشاعت: جنوری ۲۰۱۱ء
ا ہتماِمِ اشاعت:سرمد اکادمی، اٹک
قیمت:۲۰۰ روپے
انتساب: اُس ربِّ کائنات کی صنعت گری کے نام جس نے میرے خیال کو تمثیل کر دیا
تشکیل ای بک:نوید فخر

ماں

ماںمرے پیار کا پہلا عنوان ہے
ماں مری زندگی ہے مری جان ہے
ماں کی آنکھیں سمندر کوئی بیکراں
ماں ہی دھرتی مری اور مراآسماں
ماں کی خوشبو سے جیون مہکتارہے
کچھ رہے نہ رہے ماں تُوزندہ رہے
ماں! تیرے حوصلوں کو سلامِ وفا
تجھ سے تعبیرہے پھر وجودِ خدا
تیرا پیکر حسیں ،دل نشیں روشنی
تومرے سارے رازوںکی واقف بنی
تیری آنکھوںکے روشن ستارے رہیں
منزلیں اور کنارے ہمارے رہیں
ایک تیری دعا سے ملے ہر خوشی
ایک تیری رضا ہی مری بندگی

٭٭٭

صفحات : 1 | 2 | 3 | 4 | 5 | 6 | 7 | 8 | 9 | 10 | 11 | 12 | 13 | 14 | 15 | 16 | 17 | 18 | 19 | 20 | 21| 22 | 23 | 24 | 25 | 26 | 27 | 28 | 29 | 30 | 31 | 32 | 33 | 34 | 35 | 36 | 37 | 38 | 39 | 40 | 41 | 42 | 43 | 44 | 45 | 46 | 47 | 48 | 49 | 50 | 51 | 52 | 53 | 54 | 55 | 56 | 57 | 58 | 59 | 60 | 61 | 62 | 63 | انڈیکس |

تازہ ترین

کیا آپ صاحب کتاب ہیں؟

کیا آپ چاہتے ہیں کہ آپ کی تصنیف دنیا بھر میں لاکھوں شائقین تک پہنچے ؟ تو کتاب ”ان پیچ“ فارمیٹ میں اور سرورق سکین کر کے ہمیں ای میل یا ارسال کریں، ہم آپ کے خواب کو شرمندہ تعبیر کریں گے۔

مزید معلومات کے لئے یہاں کلک کریں